257

لندن زیر زمین (اسے ٹیوب بھی کہا جاتا ہے)

لندن کے زیر زمین (ٹیوب) کے ساتھ ایک بہترین اور سب سے زیادہ قابل اعتماد میٹرو پولس سسٹم
ہے۔ لندن انڈر گراؤنڈ لندن شہر میں سفر کرنے کا ایک تیز، قابل بھروسہ اور محفوظ طریقہ ہے۔ یہ دنیا کے بہترین میٹرو سسٹمز
میں سے ایک ہے اور یہ آپ کی منزل تک پہنچنے کا آسان، سستا اور محفوظ طریقہ فراہم کرتا
ہے۔ زیر زمین اسٹیشنوں کو استعمال کرنے کے لیے آپ کو یا تو اویسٹر کارڈ کی ضرورت ہے یا اندر جانے اور باہر جانے کے
لیے کرایہ ادا کرنے کے لیے کنٹیکٹ لیس طریقہ چاہیے جو کہ 4 پاؤنڈ 30.5 ڈالر ہے۔

جب آپ پہلی بار ٹیوب اسٹیشن میں داخل ہو تے ہیں تو آپ کو اپنے منتخب کردہ ادائیگی کے طریقے کے ساتھ 2 پاؤنڈ ادا کرنے ہوں گے۔ پھر ٹیوب کو اپنی منزل کے قریب ترین اسٹیشن تک لے جائیں اور باہر نکلنے کے لیے 2 پاؤنڈ ادا کریں۔

خود ٹرین کے اندر اصلی کپڑے سے بنی سیٹیں ہیں جوانہیں عام پالسٹک کے بنچوں یا پاخانے سے کہیں زیادہ آرام دہ بناتی ہیں۔ اگر تمام نشستوں پر قبضہ ہو گیا تو وہاں کھڑے ہونےاور لوگوں کے جگہ خالی کرنے کا انتظار کرنے کے لیے کافی جگہ ہے۔ اگرچہ London زیر زمین کافی جدید نظر آتا ہے اوراسے اب بھی لاکھوں لوگ استعمال کرتے ہیں یہ دنیا کا پہلا زیر زمین ریلوے نظام ہے۔ پیڈنگٹن اور فیڈنگٹن اسٹیشنوں کے درمیانمیٹروپولیٹن ریلوے دنیا کا پہلا زیر زمین ریلوے نظام تھا جو 1863 میں کھولا گیا۔ افتتاحی دن 30,000 سے زیادہ مسافروں نے ریلوے کو آزمایا لیکن یقیناً اس وقت اس طرح کی نقل و حمل صرف امیروں کے لیے دستیاب تھی۔ لندن شہر کو دریافت کرنے کے مختلف طریقے فراہم کرتا ہے جیسے سینٹنڈر بائیکس، بسیں اور ٹرینیں لیکن (ٹیوب زیر زمین ریلوے )کا نظام ہمیشہ یوکے کے لیے اہم نقل و حمل کا نظام رہے گا۔

لندن کا زیر زمین نظام دنیا کے بہترین نظاموں میں سے ایک ہے۔ حکومت پاکستان کو تمام بڑے جیسے اسلام آباد میٹرو میں کچھ ایسا ہی اور موثر عمل درآمد کرناچاہیے





اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں